و جاندار عضویے اور ان کا اطراف (The Living Organisms and Their Surroundings) تم کا کوئی جاندار نہ پایا جاتا ہو(شکل 9 . 1)۔ پہیلی نے دور دراز کے مقامات کے بارے میں پڑھنا اور سوچنا شروع کیا ۔ اسے معلوم ہوا کہ لوگوں نے تو آتش فشاں کے دہانے میں بھی بہت چھوٹے جاندار عضویوں کو ھوج نکالا ہے۔ * ناتالي - (((((( 2011 ((((( ۱۰ - از 5 کیا اور بوجھو چھٹیوں میں متعدد مقامات کی سیر پر گئے ۔ / اس قسم کے ایک سفر پر وہ رشی کیش میں دریائے گنگا رکھے گئے۔ وہ ہمالیہ کے برفیلے پہاڑی سلسلے کے کچھ پہاڑوں پر بھی چڑھ جہاں بہت زیادہ سردی تھی۔ ان پہاڑوں پر انھوں نے صنوبر، چیڑ اور دیو دار جیسے بہت سے درخت دیکھے جو ان کے میدانی علاقوں کے درختوں سے بہت زیادہ مختلف تھے ۔ ایک اور سفر کے دوران انھوں نے راجستھان کی سیر کی اور اونٹ پر گرم ریگستان کا دورہ کیا۔ یہاں سے انھوں نے مختلف قسم کے کیش کے پودے جمع کیے۔ آخیر میں وہ پوری گیے اور سمندر کے ساحل کی سیر کی ، یہاں انھوں نے کیزو رانا کے درختوں کی قطار دیکھیں۔ ان مقامات کی سیر سے لطف اندوز لمحات کو یاد کرتے ہوئے ان کے ذہن میں اچانک ایک خیال آیا، یہ مقامات ایک دوسرے سے بہت مختلف تھے۔ کچھ بہت سرد تھے تو کچھ بہت گرم اور خشک کچھ جگہیں کافی مرطوب تھیں ۔ لیکن ان بھی جگہوں پرمختلف قسم کے بہت سارے عضویے( جاندار چیزیں موجود تھے۔ انھوں نے یہ جاننے کی کوشش کی کہ کیا زمین پر کوئی امی جگہ بھی ہے، جہاں کوئی بھی جاندار چیز نہ پائی جاتی ہو۔ بوجھونے اپنے آس پاس کی جگہوں پر غور کیا ۔ گھر کے اندر اس نے الماری اور دروازوں کو دیکھا اس نے سوچا تھا کہ یہاں کوئی بھی جاندار چیز نہیں ہوگی لیکن اسے ایک چھوٹی سی کڑی نظر آئی۔ گھر کے باہر بھی وہ کسی ایسے مقام کے بارے میں نہیں سوچ پایا جہاں کسی بھی شکل 9 . 1 جاندار عضویوں کی تلاش 9 . 1 جاندارضونے اور اطراف جهاں وہ رہتے ہیں (Organisms and the Surroundings Where They Live) پہلی اور بوجھو کے ذہن میں ایک اور بات بھی کہ جن مختلف مقامات کی انھوں نے سیر کی تھی وہاں مختلف تم کے عضوپے ان میں سے ایک جگہ رشی کیش میں گنگا ندی تھی۔ ریگستان میں اونٹ تھے، پہاڑوں پر بکریاں اور پاک جیسے جانور تھے۔ پوری میں دیگر قسم کے جاندار تھے۔ ساحل پر کیکڑے اور چھلیوں کی کس قدر میں تھیں جو کہ ماہی گیروں نے سمندر سے پڑھی تھیں۔ وہاں چیونٹی جیسے کچھ عضویے بھی نظر آرہے تھے جو کہ ان بھی مختلف مقامات پر موجود تھے۔ ہر ایک علاقے میں پائے جانے والے پیڑ پودے دوسرے علاقے کے پیٹ پودوں سے کافی مختلف تھے۔ ان مختلف علاقوں کے اطراف کے بارے میں کیا خیال ہے؟ کیا یہ سب ایک جیسے ہیں۔ عملی کام1 آ نے جنگل سے شروع کرتے ہیں۔ یہاں پائے جانے والے پودوں، جانوروں اور چیزوں پر غور کیے۔ انہیں جدول 9 . 1 کے کالم میں درج ہے۔ دوسرے علاقوں میں پانی جانے والی چیزوں، جانوروں اور پودوں کو بھی اسی جدول میں درن ھے۔ جدول 9 . 1 کو پر کرنے کے لیے آپ اس پورے باب میں بیان کی گئی مثالوں کو جمع کر سکتے ہیں۔ جدول کو پر کرنے کی غرض سے اور زیادہ مثالیں حاصل کرنے کے لیے اپنے والدین، دوستوں اور اساتذہ سے گفت وشنید کیے۔ آپ کتب خانے میں موجود ان کتابوں کا بھی مطالعہ کر سکتے ہیں جن میں مختلف علاقوں میں پائے جانے والے پودوں، جانوروں اور معدنیات کا ذکر ہے۔ اس جدول کے ہر ایک کالم میں زیادہ سے زیادہ چھوٹے اور بڑے پودوں، جانوروں اور چیزوں کو شامل کیجیے۔ کون کون سی قسم کی اشیا ایسی ہیں جو نہ تو پودے ہیں اور نہ ہی جانور؟ شاید پودوں کے حصے مثلا سوکھی ہوئی پتیاں یا جانوروں کے حصے مثلا ہڈیاں وغیرہ۔ مختلف قسم کی مٹیاں اور پھر بھی اس میں شامل ہو سکتے ہیں۔ سمندر کا پانی جس میں حل پینک موجود ہو، جیسا کہ باب میں بحث کی گئی تھی۔ اس کے علاوہ اور بہت سی چیز میں ہوسکتی ہیں۔ جیسے جیسے ہم باب میں آگے کی طرف بڑھیں، جدول 9 . 1 میں مزید مثالوں کا اضافہ کھے۔ جیسے جیسے ہم اور زیادہ علاقوں کا سفر کریں گے جدول پر بحث جاری رکھیں گے۔ | 9 . 2 (Habitat Adaptation) عملی کالم میں جن پودوں اور جانوروں کی فہرست تیار کی گئی اس سے آپ کو کیا حاصل ہوتا ہے؟ کیا آپ کو ان میں بہت زیادہ تنوع نظر آتا ہے۔ جدول 9 . 1 کے ریگستان والے کالم جدول 9 . 1 ملف اطراف میں پائے جانے والے جانور، پودے اور دیگر چیزیں پہاڑی علاقے میں | ریگستان میں | سمندر میں جنگل میں دیگر مقامات پر 96 لاتنس اور سمندر والے کالم میں جو کچھ اندراجات کیے ہیں انہیں بلھے ۔ کیا آپ نے ان دونوں کالموں میں بہت زیادہ متنوع عضویوں کا اندراج کیا ہے؟ کیا ان دونوں علاقوں کا اطراف یکساں ہے؟ سمندر میں، پودے اور جانور کھارے (مکین پانی سے گھرے رہتے ہیں۔ ان میں سے زیادہ تر پانی میں بھی ہوئی ہوا کا استعمال کرتے ہیں۔ ریگستان میں بہت کم پانی دستیاب رہتا ہے۔ ریگستان میں دن بہت زیادہ گرم اور رات بہت زیادہ سرد ہوتی ہے۔ ریگستان کے پیڑ پودے اور جانور ریگستان کی مٹی میں رہتے ہیں اور اپنے اطراف کی ہوا میں سانس لیتے ہیں۔ سمندر اور ریگستان کا اطراف ایک دوسرے سے بالکل مختلف ہوتا ہے اور ہمیں ان دونوں علاقوں میں بہت زیادہ متنوع جاندار عضوے نظر آتے ہیں ۔ کیا ایسا نہیں ہے؟ آیئے ریگستان اور سمندر کے دو بالکل مختلف جاندار عضویوں اونٹ اور پچھلی پر غور کرتے ہیں۔ اونٹ کی جسمانی ساخت اسے ریگستان کے حالات میں زندہ رہنے میں مدد کرتی ہے۔ اونٹ کی مثالیں بھی ہوتی ہیں جو اس کے جسم کو ریت کی گرماہٹ سے دور رکھتی ہیں (شکل 9 . 2)۔ یہ بہت کم پیشاب خارج کرتا ہے۔ اس کا گوبر خشک ہوتا ہے اور اسے پسینہ بھی نہیں آتا۔ کیونکہ اونٹ اپنے جسم سے بہت کم پانی ضائع کرتا ہے اس لیے بہت دنوں تک بغیر پانی کے زندہ رہ سکتا ہے۔ ا پنے مختلف قسم کی مچھلیوں پر غور کرتے ہیں۔ ان میں سے کچھ شکل 9 . 3میں دکھائی گئی ہیں۔ متعددم کی مچھلیاں ہیں لیکن کیا آپ کو ان بھی کی جسمانی بناوٹ میں کوئی یکسانیت نظر آتی ہے۔ یہاں پر دکھائی گئی ہر ایک مچھلی کا جسم سیل خطی (Streamlined) ہوتا ہے جیسا کہ باب 8 میں ذکر کیا گیا ہے۔ یہ بناوٹ پانی کے اندر حرکت کرنے میں ان کی مدد کرتی ہے۔ مچھلیوں کے جسم پر چکے تھلے پائے جاتے ہیں۔ یہ چلے چھلی کی حفاظت کرتے ہیں اور پانی میں بآسانی حرکت کرنے میں مدد کرتے ہیں۔ ہم نے باب 8 میں اس بات پر بھی بحث کی ہے کہ مچھلیوں میں چھٹے زعے (Fins) اور دم شکل 9 . 3 مختلف قسم کی مچھلیاں شكل 9 . 2 اونٹ اور اس کا اطراف جاندار عضویے اور ان کا اطراف 97 کسی عضویے میں ایک مختصر وقفے کے دوران پیدا ہونے والی تبدیلیاں آن عضولیوں کے اطراف میں ہونے والی تبدیلیوں سے تو انت اختیار کرنے میں معاون ہوسکتی ہیں۔ مثال کے طور پر اگر ہم میدانی علاقے میں رہتے ہیں اور اچانک کسی اونچے پہاڑی علاقے میں چلے جاتے ہیں تو ہمیں وہاں کچھ دنوں تک سانس لینے اور جسمانی کام کرنے میں وقت پیش آسکتی ہے۔ جب ہم اونچے پہاڑوں پر جاتے ہیں تیزی سے سانس لینے کی ضرورت پیش آتی ہے۔ کچھ دنوں کے بعد ہمارا جسم اونچی پہاڑی علاقوں کے حالات سے تو ان اختیار کر لیتا ہے۔ ایک مختصر وقفے کے دوران کی واحد عضویے کے جسم میں پیدا ہونے والی ایک چھوٹی چھوٹی تبدیلیاں جن کی مدد سے وہ اپنے اطراف میں رونما ہونے والی تبدیلیوں کی وجہ سے پیدا ہونے والے مسئلوں پر قابو پالیتا ہےAcclimatisation کہلاتی ہیں۔ یہ تبدیلیاں نوانی سے مختلف ہیں جو کہ ہزاروں سال کے عرصے میں واقع ہوتا ہے۔ ہوتی ہے جو سمت تبدیل کرنے میں ان کی مدد کرتی ہے اور وہ اطراف جہاں جاندار عضویے رہتے ہیں ان کا مسکن پانی میں جسم کا توازن بنائے رکھتی ہے۔ مچھلیوں میں پائے کہلاتا ہے۔ جاندار عضویے اپنی غذا، پانی، ہوا، پناہ گاہ اور جانے والے پھو (Gills پانی میں کھلی ہوئی آکسیجن کا دیگر ضروریات کے لیے اپنے مسکن پر مختصر رہتے ہیں ۔ مسکن کا استعمال کرنے میں اس کی مدد کرتے ہیں۔ مطلب ہے رہائش کی جگہ ایک گھر)۔ مختلف تم سے جانور ہم دیکھتے ہیں کہ پچھلی کی جسمانی بناوٹیں اسے پانی کے اور پودے ایک ہی قسم کے مسکن میں زندہ رہ سکتے ہیں۔ اندر رہنے میں مدد کرتی ہیں اور اونٹ کی جسمانی بناوٹیں اسے وہ پودے اور جانور جو کہ زمین پر رہتے ہیں ان کا مسکن ریگستان میں زندہ رہنے میں مدد کرتی ہیں۔ بری مسکن (Terristal Habitats) کہلاتا ہے۔ ہم نے زمین پر رہنے والے متعددم کے جانوروں اور جنگلات، گھاس کے میدان ریگستان ، سمندر کے ساحلی علاقے پودوں میں سے صرف دو کی ہی مثال کی ہے۔ ان بھی جاندار اور کوہستان بری مسکن کی کچھ مثالیں ہیں۔ اس کے برعکس پانی عضویوں میں ہمیں یہ دیکھنے کو ملے گا کہ ان میں کچھ ایسی میں رہنے والے پودوں اور جانوروں کا مسکن آبی خصوصیات ہوتی ہیں جو انہیں اس ماحول میں زندہ رہنے میں مسکن (Aquatic Habitats) کہلاتا ہے۔ تالاب، مدد کرتی ہیں جہاں یہ عام طور سے پائے جاتے ہیں۔ پودے دلدلی علاقے، بجھیلیں، ندیاں اور سمندر کی مسکن کی کچھ یا جانور میں کسی مخصوص صفت یا عادت کی موجودگی جس کی وجہ مثالیں ہیں۔ دنیا کے مختلف حصوں میں پائے جانے والے سے وہ اپنے اطراف میں آسانی سے زندہ رہ پاتا ہے تو افق جنگلات، گھاس کے میدان، ریگستان، ساحلی اور پہاڑی کہلاتی ہے۔ مختلف جانور اپنے اطراف کے ساتھ مختلف علاقے ایک دوسرے سے کافی مختلف ہوتے ہیں۔ یہ بات طریقوں سے توانی اختیار کر لیتے ہیں۔ تمام آبی ساکن پر بھی صادق آتی ہے۔ 98 کسی مسکن میں رہنے والے جان دار عضویے جیسے پودے اور جانور اس مسکین کے لیے حیاتیاتی اجزا Biotics (Components کہلاتے ہیں ۔ مسکن میں پائی جانے والی متعدد بے جان چیزیں جیسے چٹانیں مٹی ہوا اور پانی اس مسکن کے غیر حیاتیاتی اجزاء (Abiotic Components) کہلاتے ہیں۔ سورج کی روشنی اور گرمی بھی مسکن کے غیر حیاتیاتی اجزاء ہیں۔ ہم جانتے ہیں کہ کچھ پودے بچوں سے آگئے ہیں۔ آیئے کچھ غیر حیاتیاتی عوامل پر غور کرتے ہیں اور دیکھتے ہیں کہ بچوں کے اگے میں ۔ عوامل کس طرح اثر انداز ہوتے ہیں۔ عملی کام 2 باب 1 میں بھی کام 5 کو یاد کیجیے۔ ہم نے مونگ اور چنے کے بچوں سے کلے نکالے تھے۔ جب بیجوں سے کلے نکل آتے ہیں تو کہا جاتا ہے کہ جاگنے لگے ہیں۔ یہ نئے پودے کی شروعات ہے۔ مونگ کے کچھ خشک نہ تھے۔ ان میں سے تھوڑے سے یہ ایک طرف رکھ دیکھے اور باقی بیجوں کو ایک دن کے لیے پانی میں بھگو دیکھیے۔ بھیگے ہوئے بیجوں کو چار حصوں میں تقسیم کیے۔ ایک حصے کو مکمل طور سے پانی میں ڈبا کر 3 - 4 دنوں کے لیے رکھ دی ہے۔ پانی میں ڈوبے ہوئے بیجوں اور خشک بیجوں کو بالکل مت چھیڑیئے۔ بھیگے ہوئے بیجوں کے ایک حصے کو کسی ایسے کمرے میں رکھ دیجیے جہاں سورج کی روشنی آتی ہے اور دوسرے حصے کو کسی اندھیری جگہ میں رکھی بے مثالا کوئی الماری وغیرہ میں جہاں بالکل بھی روشنی نہیں آتی۔ چوتھے حصے کو کسی ٹھنڈی جگہ میں رکھ دیئے مثلا کسی ریفریجریٹر میں یا پھر اس کے چاروں طرف برف لگا دیے۔ ان تینوں حصوں کے بیجوں کو روزانہ اچھی طرح کھنگا لیے اور ان کا پانی بہا دیئے۔ کچھ دنوں کے بعد آپ کیا دیکھتے ہیں؟ کیا تھی پانچوں حصوں کے نا مساوی طور پر آگے ہیں؟ کیا آپ دیکھتے ہیں کہ کسی ایک حصے کے نہ بالکل بھی نہیں اگے ہیں یا پھر اگنے کا عمل بہت سست ہے؟ کیا آپ دیکھتے ہیں کہ ہوا، پانی، روشنی اور حرارت جیسے غیر حیاتیاتی عوامل پودوں کی نشوونما کے لیے بہت اہم ہیں؟ درحقیقت یہ غیر حیاتیاتی اجزاء بھی جاندار عضویوں کے لیے نہایت اہم ہیں۔ ہم دیکھتے ہیں کہ جاندار عضویے بہت زیادہ سرد اور گرم دونوں طرح کی آب و ہوا میں پائے جاتے ہیں، کیا ایسا نہیں ہے؟ یہ کس طرح زندہ رہ پاتے ہیں؟ توافق انہیں زندہ رہنے میں مدد کرتا ہے۔ توافقت کاعمل تھوڑے سے وقفے میں واقع نہیں ہوتا۔ کسی علاقے کے غیر حیاتیاتی عوامل ہزاروں سال کے عرصے میں تبدیل ہوتے ہیں۔ جو جانور ان تبدیلیوں سے توافق نہیں کر پاتے وہ مر جاتے ہیں اور جو تو افت کر لیتے ہیں وہ زندہ رہ پاتے ہیں۔ جانورمختلف غیر حیاتیاتی عوامل کے ساتھ مختلف طریقوں سے تو ان کرتے ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ مختلف مساکن میں مختلف تم کے جاندار عضویے موجود ہیں۔ آیئے کچھ مساکن پر غور کرتے ہیں، ان مساکن کے غیر حیاتیاتی عوامل اور یہاں رہنے والے جانوروں کی توافقی بناوٹ کا مطالعہ کرتے ہیں۔ جاندار عضویے اور ان کا اطراف 99 9 . 3 مختلف مساکن کا سفر A Journey مشاہدہ کیجیے۔ آپ کیا دیکھتے ہیں؟ کیا آپ کو دونوں پانتھین کے اندر جمع ہونے والے پانی کی مقدار میں کچھ فرق نظر آتا ہے؟ چند پری مساکن Through Different Habitates) (Some Terrestrial Habitats) شکل 9 . 4 بلوں میں ریگستانی جانور ریگستان ہم نے ریگستان کے غیر حیاتیاتی عوامل اور اونٹ کی توافقی بناوٹ پر بحث کی ہے۔ ریگستان میں پائے جانے والے دیگر جانوروں اور پودوں کے بارے میں آپ کی کیا رائے ہے؟ کیا ان بھی میں ایک جیسی توافقی بناوٹیں ہوتی ہیں؟ ریگستان میں چوہے اور سانپ جیسے جانور بھی ہوتے ہیں جن میں اونٹ کی طرح بی ٹانکھیں نہیں ہوتیں۔ دن کے وقت تیز گرمی سے دور رہنے کے لیے یہ جانور ریت کے اندر گہرے بلوں میں رہتے ہیں (شکل 9 . 4)۔ یہ جانور صرف رات کے وقت باہر آتے ہیں جب ماحول ٹھنڈا ہو جاتا ہے۔ شکل 9 . 5 میں کچھ ایسے پودے دکھائے گئے ہیں جو ریگستان میں اگتے ہیں۔ یہ ریگستانی ماحول سے کس طرح توافق کرتے ہیں؟ عملی کام 3 گلے میں لگا ہوا ایک کیکٹس کا پودا اور ایک یتی دار پودا اپنی کلاس میں لے کر آئے۔ دونوں پودوں کے کچھ حصوں پر پاتین کس کر باندھ دیے جیسا کہ باب 7 کے عملی کام میں کیا تھا جہاں ہم نے پودوں میں عمل سریان کا مطالعہ کیا تھا۔ گملوں کو دھوپ میں رکھ د یے اور کچھ گھنٹوں کے بعد ان کا شکل 9 . 5 ریگستان میں اگنے والے کچھ پودے ریگستانی پودے سریان کے نتیجے میں بہت کم پانی ضائع کرتے ہیں۔ ریگستانی پودوں کی پتیاں یا تو بہت چھوٹی ہوتی ہیں یا پھر غیر موجود ہوتی ہیں یا کانوں کی شکل میں ہوتی ہیں۔ اس سے سران کے عمل میں پتیوں کے ذریعے بہت کم پانی ضائع ہوتا ہے۔ دیش کے پودے میں آپ کو جو پی نما شکل نظر آتی ہے دراصل وہ اس کا تنا ہے (شکل 9 . 5)۔ ان پودوں میں ضیائی تالیف کامل عموما تنوں کے ذریعے انجام دیا 100 سائنس جاتا ہے۔ تھا ایک موم جیسی موٹی پت سے ڈھکا رہتا ہے، جس سے تنے میں پانی کو برقرار رکھنے میں مددلاتی ہے۔ زیادہ تر ریگستانی پودوں کی جڑیں مٹی میں کافی گہرائی تک ہوتی ہیں تاکہ پانی کو جذب کرسکیں۔ پهاڑی علاقے یہ مساکن عموما سرد ہوتے ہیں اور یہاں تیز ہوائیں چلتی ہیں۔ کچھ جگہوں پر سردی میں برف باری بھی ہوتی ہے۔ پہاڑی علاقوں میں پودوں اور جانوروں کی مختلف اقسام پائی جاتی ہیں۔ کیا آپ نے ایسے درخت دیکھے ہیں جو کہ شکل 9 . 6 میں دکھائے گئے ہیں؟ ڈھلواں شاخیں ہوتی ہیں۔ ان میں سے کچھ درختوں کی پتیاں سوئی نما ہوتی ہیں۔ اس سے ان پودوں پر گرنے والا بارش کا پانی اور موجود برف آسانی سے پھسل کر نیچے آجاتا ہے۔ پہاڑوں پر کچھ ایسے درخت بھی موجود ہو سکتے ہیں جو ان درختوں سے بالکل مختلف ہوں۔ پہاڑوں پر زندہ رہنے کے لیے ان میں مختلف قسم کی توافقی بناوٹیں ہوسکتی ہیں۔ (a) (b) شكل 9 . 7 (a) پهاڑی تیندوا شكل 9 . 6 پهاڑی مسکن کے کچھ پودے اگر آپ کی پہاڑی علاقے میں رہتے ہیں یا بھی پہاڑی علاقے میں گئے ہوں تو آپ اس قسم کے بہت سے درخت دیکھ سکتے ہیں۔ لیکن کیا آپ نے کبھی اس قسم کے درختوں کو دوسرے علاقوں میں قدرتی طور پر اگتے ہوئے دیکھا ہے؟ | بیر درخت اپنے مسکن کے حالات سے کس طرح توافق کرتے ہیں؟ یہ درخت مخروط نما ہوتے ہیں اور ان میں (b)ياك اور (ع) پهاڑی بکری پهاڑی مسکن سے توافق کرلیتے هیں (c) جاندار عضویے اور ان کا اطراف 101 (b) پہاڑی علاقوں میں رہنے والے جانوروں میں بھی وہاں کے حالات کے مطابق توافق پایا جاتا ہے (شكل 9 . 7)۔ ان کی جلد موٹی ہوتی ہے یا پرفر سے ڈھکی ہوتی ہے تا کہ سردی سے محفوظ رہ سکیں۔ مثلا یاک کے جسم پر لے بال پائے جاتے ہیں جو اس کے جسم کو گرم رکھتے ہیں۔ برفیلے تیندوے کے جسم پرموی فر پائی جاتی ہے۔ یہ فران کے پیروں اور انگلیوں پر بھی پائی جاتی ہے۔ یہ برف پر چلنے کے دوران ان کی سردی سے حفاظت کرتی ہے۔ پہاڑی بکریوں کے کھر بہت مضبوط ہوتے ہیں تا کہ پہاڑی کے چٹانی ڈھلانوں پر دوڑ لیں۔ پہاڑی علاقوں میں ہم جیسے جیسے اوپر کی طرف جاتے ہیں تو اطراف میں تبدیلی آتی جاتی ہے اور ہمیں مختلف اونچائیوں پر مختلف توانی دیکھنے کو ملتے ہیں۔ گھاس کے میدان شیر جنگل یا گھاس کے میدان میں رہتا ہے اور ایک طاقتور جانور ہے جو کہ شکار کرتا ہے اور ہرن جیسے جانوروں کو مار دیتا ہے۔ اس کا رنگ ہلکا بھورا ہوتا ہے۔ ہرن اور شیر کی تصویر کو دیکھیے (شکل 9 . 8)۔ ان دونوں جانوروں میں ان کے چہرے پر آنکھوں کا مقام کیسا ہے؟ کیا یہ چہرے پر سامنے کی طرف ہیں یا چہرے کے دونوں طرف ہیں؟ شیر کی اگلی ٹانگوں میں بے پنچے ہوتے ہیں یہ اندر کی طرف مڑ جاتے ہیں۔ کیا شیر کی یہ خصوصیات اسے زندہ رہنے میں کس طرح کی مدد کرتی ہیں؟ جب یہ شکار کی تلاش کرتا ہے تو اس کام کا بھورا رنگ خشک گھاس کے میدان میں چھینے میں مدد کرتا ہے۔ آنکھیں چہرے پر سامنے کی طرف ہونے کی وجہ سے شکار کی سی پوزیشن کا اندازہ لگانے میں مددیتی ہے۔ شكل 9 . 8 (a)شیر اور (b) هرن ہرن ایک اور ایسا جانور ہے جو جنگلات اور گھاس کے میدانوں میں رہتا ہے۔ اس کے دانت مضبوط ہوتے ہیں تا کہ جنگل میں پائے جانے والے درختوں کے سخت تنوں کو چا ت سکے۔ ہرن کو شکاریوں جیسے شیر کے بارے میں جانکاری حاصل ہے کرنے کی بھی ضرورت ہوتی ہے تا کہ وہ ان سے دور بھاگ سکے اور ان کا شکار نہ بن پائے۔ اس کے کان لمبے ہوتے ہیں جس کی وجہ سے یہ شکاریوں کی حرکات کو آسانی سے سن لیتا ہم ہے۔ سر کے دونوں طرف آنکھوں کی موجودگی کی وجہ سے یہ تمام سمتوں میں دیکھ سکتا ہے اور خطرے کو بھانپ سکتا ہے۔ ہرن کی تیز رفتار انہیں شکاریوں سے دور بھاگنے میں مدد کرتی ہے۔ شیر، ہرن اور دیگر جانوروں نیز پودوں میں اور بھی کئی خصوصیات ہوتی ہیں جو انہیں ان کے مسکن میں زندہ رہنے میں مدد کرتی ہیں۔ ء 102 لاتنس تالاب پر جایئے اور وہاں پر نظر آنے والے پودوں کی تصویر بنانے کی کوشش کیے۔ ان پودوں کی پتیاں، تے اور جڑیں ان میں سے کچھ پودوں کی جڑیں پانی کے نے مٹی میں جنسی ہوتی ہیں (شکل 9 . 3)۔ بری پودوں میں جڑیں عموما ایک اہم کردار ادا کرتی ہیں۔ بیٹی سے پانی اور تغذیات کا انجذاب کرتی ہیں۔ حالانکہ آبی پودوں میں جڑیں بہت چھوٹی ہوتی ہیں اور ان کا خاص کام پودوں کو اپنی جگہ پر قائم رکھنا ہے۔ و شیرینی کالی مساکن (Some Aquatic Habitats) سمندر (Oceans) ہم پہلے ہی بحث کر چکے ہیں کہ مچھلیاں سمندر میں زندہ رہنے کے لیے کس طرح توانت اختیار کرتی ہیں۔ کئی دوسرے سمندری جانوروں کا جسم بھی سیل خطی ہوتا ہے تاکہ پانی میں بآسانی حرکت کرسکیں۔ آکٹوپس اور اسکوڈس جیسے کچھ ایسے سمندری جانور بھی ہیں جن کا جسم سیل خطی نہیں ہوتا یہ سمندر میں کافی گہرائی میں سمندر کی تھی کے نزدیک رہتے ہیں اور اپنی طرف آنے والے شکار کو پکڑ لیتے ہیں۔ حالانکہ جب یہ پانی میں حرکت کرتے ہیں تو اپنے جسم کویل خبھی بنا لیتے ہیں۔ ان جانوروں میں پھر پائے جاتے ہیں جو انہیں پانی میں کھلی ہوئی آکسیجن کا استعمال کرنے میں مدد کرتے ہیں۔ ڈان اور ویل جیسے کچھ ایسے سمندری جانور بھی ہیں جن میں پھر نہیں ہوتے۔ یہ اپنے نتھنوں یا ہوائی سوراخوں (Blowholes) کی مدد سے ہوا میں سانس لیتے ہیں ۔ ہوائی سوراخ ان کے سر کے بالائی حصوں میں واقع ہوتے ہیں۔ جب یہ جانور پانی ک کے قریب تیرتے ہیں تو ان سوراخوں کی مدد سے ہوا میں سانس لیتے ہیں۔ یہ پانی کے اندر بغیر سانس لیے لمبے عرصے تک شہر سکتے ہیں۔ یہ ہوا میں سانس لینے کے لیے وقتا فوقتان سے باہر آتے رہتے ہیں۔ کیا بھی آپ نے سمندری زندگی پر بنی سی علم یونی وی پروگرام میں ڈوھن کی دلچسپ حرکتوں کو دیکھا ہے؟ تالاب اور جھیلیں (Ponds and Lakes) کیا آپ نے تالابوں، جھیلوں، ندیوں اور کچھ نالوں میں پودوں کو اگتے ہوئے دیکھا ہے؟ اگر ممکن ہو تو کسی نزدیکی اما با این نتا سه توده شكل 9 . 9 کچھ آبی پودے پانی کی سطح پر تیرتے هیں ، جزوی طور پر پانی میں ڈوبے هوئے پودے جن کی جڑیں مٹی میں دھنسی هوئی هیں، کچھ پودے مکمل طور پر پانی میں ڈوبے هوئے هیں۔ ان پودوں کے تنے لمبے کھوکھلے اور ہلکے ہوتے ہیں۔ نے پانی کی اس سے اوپر نمو کرتے ہیں جبکہ پنیاں پانی کی سط پتیرتی رہتی ہیں۔ کچھ آبی پردے مکمل طور سے پانی میں ڈوبے رہتے ہیں۔ ان پودوں کے تمام حصے پانی کے اندر نمو پاتے ہیں۔ ان میں سے کچھ پودوں کی پتیاں ربن کی شکل کی ہوتی ہیں۔ یہ بہتے ہوئے پانی میں مل سکتی ہیں۔ پانی کے اندر پائے جانے والے جاندار عضویے اور ان کا اطراف 103 کچھ پودوں کی پتیاں کٹی ہوئی ہوتی ہیں تا کہ ان سے ہوکر پانی چٹانیں، مٹی، پانی، ہوا، خشک پتیاں، مردہ جانور، مشروم آسانی سے بہہ جاتا ہے اور پتیوں کوسیستم کا نقصان نہیں پہنچا۔ (کرمتا اور ماس (Mass ایسی کچھ اشیا ہیں جو کہ جنگل میں مینڈک عام طور سے تالاب کو اپنے مسکن کے طور پر پائے جاتی ہیں۔ ان میں سے کون کون سی چیزیں جاندار ہیں؟ استعمال کرتے ہیں۔ مینڈک پانی میں بھی رہ سکتے ہیں اور ان چیزوں کے بارے میں سوچیے جو فی الحال آپ کے زمین پر بھی۔ ان کی پچھلی ٹائلیں کافی مضبوط ہوتی ہیں جن کی اطراف میں موجود ہیں اور ان کی گروپ بندی جاندار اور بے مدد سے یہ آنچل سکتے ہیں اور اپنے شکار کو پٹڑ سکتے ہیں۔ ان جان چیزوں کے تحت کیے۔ کچھ معاملوں میں یہ جان لینا بہت کے جالی دار پر (webbed Feet پانی میں تیرنے میں آسان ہوتا ہے۔ مثال کے طور پر ہمارے گھروں میں کری یا ان کی مدد کرتے ہیں۔ میز ایسی چیزیں ہیں جنہیں ہم جانتے ہیں کہ یہ بے جان ہیں۔ ہم نے مختلف مساکن میں رہنے والے متعددشتم کے پیلی ایڈوارڈ لیتر (Edward Lear) کی تصنیف کردہ جاندار عضویوں کے مقابلے میں چند عام جانوروں اور پودوں Complete Nonesense سے یہ قافیے پڑھ رہی تھی۔ کا یہی مطالعہ کیا ہے۔ آپ نے اپنے اطراف میں بھی پودوں کی متعدد اقسام بھی ہوں گی جب آپ نے باب 7 کے مجوزہ ملی کاموں کے تحت لہر پیری ریکارڈ تیار کیا ہوگا۔ تصور ہے کہ زمین کے بھی حصوں کے پودوں کی پتیوں کے ہر پیریم ریکارڈ میں کسی قدر اقسام دیکھی جاسکتی تھیں۔ 9 . 4 مارے اطراف میں موجود جاندار چی میز نے کرسی سے کہا تمھیں پر نہیں ہے میں گرمی سے کتنی پریشان ہوں، اور اپنے پیروں کی دوائی سے اگر ہم تھوڑ اہل سکتے، ہم تھوڑ ابول سکتے دعا کرو، ہم ہواے سکیں! میزنے کری سے کہا، کری نے میز سے کہا اب تم جانتی ہوم میں ہی استطاعت نہیں ہے؟ تم کیسی بے وقوفی کی باتیں کرتی ہوں جب کہ تم جانتی ہو ہم چل نہیں سکتے میزنے ٹھنڈی سانس بھرتے ہوئے کہا۔ (Living Things Around Us) روش کرنے میں کیا حرج ہے، یہ میرے پاس بھی اتنے ہی پیر ہیں جتنے تمھارے ہم دو پیروں پر کیوں نہیں چل سکتے؟ ہم نے مختلف مساکین کا دورہ کیا اور متعدد پودوں اور جانوروں پر بحث کی۔ عملی کام میں ہم نے مختلف اطراف میں پائے جانے والے پودوں اور جانوروں کی فہرست تیار کی تھی۔ فرض تجھے ہم اسے کچھ دیر کے لیے روک دیتے ہیں اور دیکھتے ہیں کہ ہماری فہرست میں جاندار عضویوں کی کون کون سی مثالیں ہیں؟ آ ئے جنگل سے متعلق چند مثالوں پر غور کرتے ہیں جیسے درخت ہیں، چھوٹے بڑے جانور، پرندے، سانپ حشرات، پہلی اور بوجھونے پایا کہ نظم بہت ہی مزاحیہ ہے کیونکہ انہیں معلوم تھا کہ کرسی یا میز جاندار شے نہیں ہے اور یہ نہ تو سائنس 104 ان کی مر د ہ جانوروں چل سکتی ہے، نہ بات کرسکتی ہے اور نہ ہی ان مشکلات سے دوچار ہوسکتی ہے جن کا سامنا عموما میں کرنا پڑتا ہے۔ کری میز، پتھر یا سکہ۔ ہم جانتے ہیں کہ یہ جاندار نہیں ہیں اسی طرح ہم جانتے ہیں کہ ہم جاندار ہیں اور اسی طرح دنیا کے باقی لوگ ۔ ہم یہ بھی دیکھتے ہیں کہ ہمارے اطراف میں موجود جانوروں میں بھی زندگی موجود ہے، جیسے کتے، بلیاں، بندر، گلہریاں، حشرات اور دیگر جانور ہم یہ کیسے پتہ لگاتے ہیں کہ کوئی چیز جاندار ہے؟ عموما یہ طے کریانا آسان نہیں ہوتا۔ ہم سے کہا جاتا ہے کہ پورے جاندار ہیں لیکن وہ کتے یا کبوتر کی طرح حرکت کرتے ہوئے نظر نہیں آتے۔ اس کے بس کاریا بس حرکت کرتی ہے لیکن پھر بھی ہم انہیں بے جان تصور کرتے ہیں۔ پودے اور جانور وقت کے ساتھ ساتھ نشوونما کرتے ہیں۔ لیکن اسی کے ساتھ ساتھ آسمان میں بادلوں کے سائز میں اضافہ ہوتا ہوا نظر آتا ہے تو کیا اس کا مطلب یہ ہے کہ بادل بھی جاندار ہیں؟ نہیں تو پھر جاندار اور بے جان چیزوں کے درمیان کس طرح فرق کیا جاسکتا ہے؟ کیا جاندار چیزوں میں کچھ مشترک خصوصیات موجود ہوتی ہیں جو انہیں بے جان چیزوں سے بالکل مختلف کردیتی ہیں؟ آپ جاندار چیز کی سب سے عمدہ مثال ہیں۔ آپ میں وہ کون کون سی خصوصیات ہیں جو آپ کو بے جان چیزوں سے علیحدہ کرتی ہیں؟ ان میں سے کچھ خصوصیات کو اپنی کاپی میں نوٹ کیے۔ اپنی فہرست کو دیکھے اور اس میں ان خصوصیات کی نشاندہی ھے جو کہ پودوں اور جانوروں میں بھی پائی جاتی ہیں۔ ان میں سے کچھ خصوصیات شاید کبھی جاندار چیزوں میں مشترک ہوتی ہیں۔ کیا بھی جاندار چیزوں کو غذا کی ضرورت ہوتی ہے؟ (?Do All Living Things Need Food) باب 1 اور 2 میں ہم پڑھ چکے ہیں کہ بھی جاندار چیزوں کو غذا کی ضرورت ہوتی ہے اور یہ ہمارے نیز جانوروں کے لیے کتنی ضروری ہے۔ ہم یہ بھی سیکھ چکے ہیں کہ پودے ضیائی تالیف کی مدد سے اپنی غذا خود تیار کرتے ہیں۔ جانور اپنی غذا کے لیے پودوں اور دیگر جانوروں پر خصر رہتے ہیں۔ غذا سے جانوروں کو توانائی حاصل ہوتی ہے جو کہ ان کی نشوونما کے لیے ضروری ہے۔ جاندار عضوے اس توانائی کا استعال دیگر افعال زندگی کو انجام دینے میں بھی مدد کرتے ہیں جو ان کے جسم کے اندر عمل پیرا رہتے ہیں۔ کیا ہی جاندار چیزوں میں نمو ہوئی ہے؟ Do All) (?Living Things Show Growth | کیا چار سال پہلے جو کرتا آپ نے پہن رکھا تھا وہ آج کبھی آپ کے جسم پر ٹھیک آجاتا ہے؟ اب آپ اسے اور نہیں ہوئی عجولان شکل 9 . 10 بچه نشو و نما کرکے بالغ هوجاتا هے جاندار عضویے اور ان کا اطراف 105 ک میں نموا ل يد پہن سکتے، کیا ایسا نہیں ہے؟ ان برسوں میں آپ کی لمبائی میں ضرور کچھ اضافہ ہو چکا ہو گا۔ ہوسکتا ہے آپ اس حقیقت سے آشنا ہوں، لیکن آپ ہر وقت نمو کرتے ہیں اور آئندہ کچھ برسوں میں آپ بالغ ہوجائیں گے (شکل 9 . 10 )۔ جانوروں کے چھوٹے ہو کر چھوٹے بچے بھی بالغ جانور کی شکل اختیار کر لیتے ہیں۔ آپ نے کتے کے پے کو ضرور ایک بڑے کتے کی شکل میں نمو کرتے دیکھا ہوگا۔ انڈے سے نکلنے کے بعد چوزه مرغی یا مرنے کی شکل میں نمو کرتا ہے شكل 9 . 11 چوزه نشو و نما (شکل 9 . 11)۔ کرکے بالغ هو جاتا هے پودوں میں بھی نمو ہوتی ہے۔ اپنے اطراف پرنظر ڈالی اور ایک خاص قسم کے کچھ پودوں کو دیکھے۔ ان میں سے کچھ بہت چھوٹے اور جوان ہیں، چھاگ رہے ہیں۔ یہ سب نموکی مختلف سطحوں پر ہیں۔ کچھ دنوں یا ہفتوں کے بعد ان پودوں کا مشاہدہ کیجیے۔ آپ دیکھیں گے کہ ان میں سے کچھ پودوں کے سائز میں اضافہ ہوگیا ہے۔ نمو بھی جاندار چیزوں میں عام ہے۔ کیا آپ سمجھتے ہیں کہ بے جان چیزوں میں نمونہیں ہوسکتی؟ کیا بھی جاندار کرتے ہیں؟ (?Do All Living Things Respire) کیا ہم بغیر سانس لیے زندہ رہ سکتے ہیں؟ جب ہم اندر کی طرف ساس نے ہیں تو باہر کی ہوا جسم کے اندر داخل ہوجاتی ہے۔ جب ہم باہر کی طرف سانس چھوڑتے ہیں تو جسم کے اندر کی ہوا باہر خارج ہوجاتی ہے۔ سانس لینے کا عمل Breathing تنفس (Respiration) تنفس کے عمل میں سانس کے ذریعے اندر کی گئی ہوا کی کچھ آکسیجن استعمال جاندار جسم کے ذریع کرلیا جاتا ہے۔ اس عمل کے نتیجے میں پیدا ہونے والی کاربن ڈائی آکسائڈ کو ہم سانس کے ذریعے باہر نکال دیتے ہیں۔ گائے، بھینس کتے اور بلی جیسے جانوروں میں بھی سانس لینے کا عمل انسانوں کی طرح ہی ہوتا ہے۔ ان میں سے کسی ایک جانور کا اس وقت مشاہدہ کبھی جب وہ آرام کر رہا ہو۔ اس کے شکم میں ہونے والی حرکت کو نوٹ کیجیے۔ یہ ست حرکت اس بات کی طرف اشارہ کرتی ہے کہ یہ جانور سانس لے رہے ہیں۔ تنفس کا عمل بھی جاندار عضویوں کے لیے ضروری ہے۔ نفس کی وجہ سے ہی جسم کے ذریعے لی گئی غذا سے توانائی پیدا ہوتی ہے۔ ہو سکتا ہے کچھ جانوروں میں گیسوں کے تبادلے (جو کہ نفس کا ہی ایک حصہ ہے) کا طریقہ کار کچھ مختلف ہو۔ مثال کے طور پیچھے جلد کی مدد سے سانس لیتے ہیں ۔ مچھلیوں میں جیسا کہ ہم پڑھ چکے ہیں، پانی میں کھلی ہوئی آکسیجن کا استعمال کرنے کے لیے پھر ہوتے ہیں۔ پھر پانی میں علی ہوئی جن کو جذب کر لیتے ہیں۔ کیا پودوں میں بھی نفس ہوتا ہے؟ پودوں میں گیسوں کا تبادلہ عام طور سے ان کی پتیوں کے ذریہ ہوتا ہے۔ پتیاں اپنے اندر موجود بہت باریک مساوات کی مدد سے ہوا کو اندر داخل کر لیتی ہیں اور آکسیجن کا استعال کرتی ہیں اور کاربن ڈائی آکسائڈ کو ہوا میں خارج کردیتی ہیں۔ مشاہدہ ک ے موبی جاندار پر نہیں ہوتی؟ ہونیوں میں بھینس ہوتا ہ ے ۔ چناں 106 انت ہم مطالعہ کر چکے ہیں کہ سورج کی روشنی میں پودے ہوا کی کاربن ڈائی آکسائڈ کا استعمال کر کے اپنی غذا خود تیار کرتے ہیں اور آکسیجن کو خارج کردیتے ہیں۔ پودے اپنی غذا صرف دن کے وقت بناتے ہیں جبکہ ان میں نفس کا مل دن میں ہوتا ہے اور رات میں بھی۔ پودوں کے ذریع غذا بنانے کے دوران پیدا ہونے والی آکسیجن کی مقدار تفسی کے دوران استعمال ہونے والی آسیجن کے مقابلے بہت زیادہ ہوتی ہے۔ کیا بھی جاندار حرکات کے تین رول کرتے ہیں؟ Do All Living Things Respond to) Stimuli?) اگر آپ نے پاوں جارہے ہوں اور اچانک آپ کا پیر سی نوکیلی چیز مثلا کسی کانٹے پر پڑ جائے تو آپ کس طرح کے رول کا اظہار کریں گے؟ جب آپ اپنی کسی پسندیدہ غذا کے بارے میں سوچتے ہیں یا اسے دیکھتے ہیں تو آپ کو کیسا محسوس ہوتا ہے؟ جب آپ اچانک کسی اندھیرے کمرے سے نکل کر تیز روشنی والی جگہ میں آجاتے ہیں تو کیا ہوتا ہے؟ آپ کی آنکھیں اس وقت تک کے لیے خود بخود بند ہوجاتی ہیں جب تک کہ وہ اطراف کی تیز روشنی کے ساتھ مطابقت نہ پیدا کرلیں۔ مذکورہ بالا صورتوں میں آپ کی پسندیدہ غذا، تیز روشنی اور کا نیا آپ کے اطراف میں ہونے والی تبدیلیوں کی چھ مثالیں ہیں۔ ہم بھی اس قسم کی تبدیلیوں کے میں فوری طور پر ردعمل کا اظہار کرتے ہیں۔ ہمارے اطراف کی وہ تبدیلیاں جن کے تئیں ہم ردعمل کا مظاہرہ کرتے ہیں محرکات (Stimuli) کہلاتی ہیں۔ کیا دیگر جانور بھی محرک کے تئیں ردعمل کا مظاہرہ کرتے ہیں؟ جب جانوروں کو غذا دی جا رہی ہو تو ان کے طرز عمل کا مشاہدہ کیجیے۔ کیا آپ دیکھتے ہیں کہ وہ غذا کو دکھ کر فورا حرکت میں آجاتے ہیں؟ جب آپ کسی پرندے کے نزدیک جاتے ہیں تو وہ کیا کرتا ہے؟ جب جنگلی جانوروں کے سامنے تیز روشنی کی جاتی ہے تو وہ اس سے دور بھاگ جانتے ہیں۔ اس طرح جب رات کے وقت باورچی خانے میں روشنی کی جاتی ہے تو کاکروچ اپنی چھنے کی جگہوں پر واپس جانے لگتے ہیں۔ کیا آپ محرک کے تئیں جانوروں کے رول کی کچھ اور مثالیں پیش کر سکتے ہیں؟ کیا پودے بھی محرک کے تئیں ردعمل کا اظہار کرتے ہیں؟ چھ پودوں میں پھول صرف رات کے وقت کھلتے ہیں۔ کچھ پودوں میں ان کے پھول سورج غروب جانے کے بعد بند ہو جاتے ہیں۔ چھوٹی موٹی جیسے کچھ پودوں میں ان کی پتوں کو چھونے پر وہ بند ہوجاتی ہیں۔ یہ بھی ایسی مثالیں ہیں جن میں پودے اپنے اطراف میں ہونے والی تبدیلیوں کے تمیں رول کا اظہار کرتے ہیں۔ عملی کامو ) - گلے میں لگا ہوا ایک پودا لے کر اسے کسی کمرے میں کھڑکی سے تھوڑا فاصلے پر رکھے جہاں دن میں کسی وقت سورج کی روی آنی ہو(شکل 9 . 12 )۔ گملے میں کچھ دنوں تک پابندی سے پانی ڈالتے رہے۔ کیا پودا بالکل اس طرح اوپر کی طرف نہ کرتا ہے جس طرح ملی ہوئی جگہوں کے پودے نمو کرتے ہیں؟ اس سمت کو نوٹ کیے جس سمت میں یہ پودا مڑ جاتا جاندار عضویے اور ان کا اطراف 107 ہے۔ اگر یہ اوپر کی طرف نمونہیں کر رہا ہے تو کیا آپ یہ بھی ہیں کہ یہ کیا حرکتیں کے رول ہے؟ ہے۔ پودوں میں کچھ زہریلے یا نقصان دہ مادے فضلات کے طور پر پیدا ہوتے ہیں کچھ پودے ان مادوں کو اپنے حصوں میں اس طرح جمع کر لیتے ہیں کہ وہ پودے کو نقصان نہیں پہنچاتے ہیں۔ کچھ پودے فضلاتی مادوں waste Materials) کو افراز (Secretions) کے طور پر خارج کردیتے ہیں۔ اخراج کا عمل بھی جانداروں کی ایک اور مشترک خصوصیت ہے۔ کیا بھی جاندار چیزیں اپنے جیسے جانداروں کی تولید کرتی ہیں؟ Do All Living Things) Reproduce Their Own Kinds?) شکل 9 . 12 پودے کا روشنی کے تئیں رد عمل سبھی جاندار اپنے اطراف کی تبدیلیوں کے تئیں رول کا اظہار کرتے ہیں۔ د کیا کبھی آپ نے کچھ چڑہوں جیسے کبوتر وغیرہ کے گھونسلے کو دیکھا ہے؟ ان گھونسلوں میں کچھ انڈوں سے چھوٹے پرندوں کو باہر نکلتے ہوئے دیکھا جاسکتا ہے (شکل 9 . 13)۔ جاندار عضویے اور اخراج Living Organism) and Excretion) بھی جاندار غذا لیتے ہیں۔ نوٹ کیجیے کہ لی گئی تمام غذا کیا واقعی استعال میں آجاتی ہے، یا اس کا کچھ ہی حصہ جسم کے ذریہ استعمال میں لایا جاتا ہے۔ باقی کا کیا ہوتا ہے؟ یہ جسم کے ذریعے فضلے کی شکل میں خارج کی جاتی ہے۔ ہمارا جسم زندگی کے دیگر افعال کو انجام دینے کے دوران کچھ فضلات پیدا کرتا ہے۔ وہ مل جس کے ذریعے جاندار عضویے ان فضلات سے چھٹکارا پاتے ہیں وہ اخراج (Excretion) کہلاتا ہے۔ کیا پودوں میں بھی اخراج ہوتا ہے۔ جی ہاں، پودوں میں بھی اخراج ہوتا ہے، حالانکہ پودوں میں یمل تھوڑا مختلف (b) (a) 9 (a) پرندے انڈے دیتے هیں انهیں سینے کے بعد ث (b) بچے نکلتے هیں جانور اپنے جیسے دوسرے جانوروں کی تقلید کرتے ہیں۔ مختلف جانوروں میں عمل تولید (Reproduction) 108 سائنس مختلف (شکل ہو سکتا ہے۔ کچھ جانور اپنے بچوں کو جنم دیتے ہیں 9 . 14)۔ الان | منمنم. /: في ال ای دیگه رو پیدا کیا تھا۔ شکل 9 . 14 کچھ جانور جو که بچے پیدا کرتے هیں جانوروں کی طرح پودوں میں بھی تقلید ہوتی ہے۔ پودوں میں تقلید کا عمل بھی جانوروں سے مختلف ہوتا ہے۔ بہت سے پودوں میں تولید، بچوں کے ذریعے ہوتی ہے۔ پودوں میں پیدا ہوتے ہیں جواگنے کے بعد نئے پودوں کی شکل اختیار کر لیتے ہیں (شکل 9 . 15)۔ شکل 9 . 16 آلو کی آنکھ(کلی) سے ايك نیا پودا اك آتا هے پودوں میں کنگ (Cutting) کے ذریعے بھی تقلید ہوتی ہے۔ کیا آپ اس طریقے سے پودوں کو اگانا پسند کریں گے۔ عملیام4 گلاب یا مہندی کے پودوں کی کنگ لیے۔ اسے مٹی میں گاڑ مجھے اور باقاعدگی سے پانی دیکھے۔ کچھ دنوں کے بعد آپ کیا مشاہدہ کرتے ہیں؟ ممکن ہے کہ کٹنگ کے ذریعے پودوں کو اگانا آسان نہ ہو۔ اگر آپ کی کتنگ آگ نہیں رہی ہے تو نا امید مت ہونا۔ اگر ممکن ہو تو کسی مالی سے مشورہ کیے اور پتہ لگایئے کہ اس کنگ کو اگانے کے لیے کیا کیا احتیاط ضروری ہیں؟ جاندار چیزیں تقلید کے ذریعے اپنے جیسی دوسری جاندار چیزوں کو پیدا کرتی ہیں۔ یمل مختلف عضویوں میں مختلف طریقوں سے انجام دیا جا تا ہے۔ کیا بھی جاندار چیزوں میں حرکت ہوتی ہے؟ (?Do All Living Things Move) باب ہیں ہم نے ان مختلف طریقوں پر بحث کی ہے جو کہ جانوروں کے ذریع حرکت کرنے کے لیے بروئے کار لائے کم شکل 9 . 15 پودے کا ایک بیج جس سے نیا پودا اگتا هے کچھ پودے بچوں کے علاوہ دیگر حصوں سے تولید کرتے ہیں۔ مثال کے طور پر آلو کا وہ حصہ جس میں آنکھ (Bud) ہوتی ہے، نیلے پودے کی شکل میں تقلید کر لیتا ہے (شکل 9 . 16)۔ جاندار عضویے اور ان کا اطراف 109 جاتے ہیں۔ وہ ایک جگہ سے دوسری جگہ کے لیے حرکت کرتے ہیں علاوہ ازیں ان کے جسمانی اعضا میں بھی حرکت ہوتی ہے۔ پودوں کے بارے میں آپ کی کیا رائے ہے؟ کیا ان میں بھی حرکت ہوتی ہے؟ پودے عام طور سے مٹی میں کھڑے رہتے ہیں لہذا وہ ایک جگہ سے دوسری جگہ ہیں آجاسکتے۔ تاہم پانی، معدنیات اور پودوں کے ذریے تالیف کی جانے والی غذا جیسی کئی چیزیں پودے کے ایک حصے سے دوسرے حصے میں حرکت کرتی ہیں۔ کیا آپ نے پودوں میں کسی اور حرکت کو نوٹ کیا ہے؟ پھولوں کا کھانا اور بند ہوتا؟ کیا آپ کو یاد آتا ہے کہ کچھ پودے مخصوص محرکات کے تئیں کس طرح رومل ظاہر کرتے ہیں؟ ہم نے کچھ بے جان چیزوں کو بھی حرکت کرتے ہوئے دیکھا ہے۔ بس، کار، کاغذ کا چھوٹا لڑا، باول وغیرہ وغیرہ۔ کیا ان چیزوں کی حرکت اور جانداروں کی حرکت میں کچھ فرق نظر آتا ہے؟ جاندار چیزوں کی بہت سی قسمیں ہیں، لیکن ان بھی میں کچھ خصوصیات مشترک ہیں، جیسا کہ ہم بث کر چکے ہیں۔ جانداروں کی ایک اور مشترک خصوصیت یہ ہے کہ یہ مر جاتے ہیں۔ کیونکہ جاندار مرجاتے ہیں اور جاندار عضویے کی کوئی مخصوص تم ہزاروں سال تک صرف اسی صورت میں زندہ رہ سکتی ہے اگر اس میں اپنے جیسے دوسرے عضویوں کو پیدا کرنے کی صلاحیت ہے۔ ایک واحد عضو یہ مرسکتا ہے اگر وہ تولید نہیں کرسکتا، لیکن اگر عضویے میں تقلید کی صلاحیت ہے تو عضویے کی تم زندہ رہ سکتی ہے۔ ہم دیکھتے ہیں کہ بھی جاندار چیزوں میں کچھ مشترک خصوصیات ہوتی ہیں۔ ان سبھی کو غذا کی ضرورت ہوتی ہے، ان سبھی میں تنفس کا عمل ہوتا ہے۔ محرکات کے تئیں ردعمل کا اظهار کرتے ہیں، تولید ہوتی ہے، حرکت ہوتی ہے، نمو ہوتی ہے اور مر جاتے ہیں۔ کیا ہم نے کچھ ایسی بے جان چیزوں کو بھی دیکھا ہے جو ان میں سے کچھ خصوصیات کا اظہار کرتی ہیں؟ کاره سائیکل، گھڑیاں اور ندی میں بہتا ہوا پانی، آسمان میں متحرک چاند، ہماری آنکھوں کے ٹھیک سامنے سائز میں بڑھتے ہوئے بادل، کیا اس قسم کی چیزوں کو جاندار کہا جاسکتا ہے؟ ہم اپنے آپ سے پوچھتے ہیں کہ کیا یہ چیز میں بھی ان تمام خصوصیات کو ظاہر کرتی ہیں جو کہ جاندار چیزوں میں پائی جاتی ہیں؟ عمومی طور پر، جو چیز جاندار ہے اس میں وہ تمام خصوصیات موجود ہوں جن پر ہم نے بحث کی ہے، جبکہ اس وقت بے جان چیزوں میں خصوصیات موجود نہ ہوں۔ کیا یہ بات ہمیشہ درست ہے؟ کیا ہم دیکھتے ہیں کہ جاندار چیزوں میں یقینی طور پر ہمیشہ ہی وہ خصوصیات موجود ہوں جن پر ہم نے بحث کی ہے؟ کیا ہم ہمیشہ ہی یہ مشاہدہ کرتے ہیں کہ بے جان چیزوں میں ان خصوصیات میں سے صرف چند خصوصیات بھی پائی جاتی ہیں، کبھی خصوصیات بھی نہیں پائی جاتیں۔ اسے اور بہتر طریقے سے سمجھنے کے لیے آئے ایک مثال لیتے ہیں۔ کسی نے پر غور کیجے مثلا مونگ، کیا یہ جاندار ہے؟ یہ دکان میں مہینوں تک رکھا رہ سکتا ہے اور اس میں کسی تم کی نمو نہیں ہوتی یا زندگی کی کوئی اور خصوصیت ظاہر نہیں ہوتی۔ اگر ہم اس بیج کو مٹی میں دبا دیتے ہیں اور پانی ڈالتے رہتے ہیں اور یہ ایک مکمل پودے کی شکل اختیار کر لیتا ہے۔ کیا 110 سائنس نہ کو غذا کی ضرورت پڑی، کیا اس نے اخراج کا عمل انجام دیا، جب مہینوں تک دکان میں رکھا ہوا تھا تو کیا اس میں کسی تم کی نمو یا تولید کامل دیکھنے میں آیا؟ ہم دیکھتے ہیں کہ اس طرح کے واقعات ہو سکتے ہیں جب ہم یہ بات آسانی سے نہیں کہہ سکتے کہ کسی جاندار چیز میں وہ تمام خصوصیات موجود ہیں جن پر ہم نے بحث کی ہے، (جو کہ جاندار چیزوں کی خصوصیات ہیں۔ پر زندگی کیا ہے؟ (what then is life) اپنے ہاتھ کو گیہوں کے دانوں کے ڈھیر میں گہرائی تک لے جایئے۔ کیا آپ کو اندر گرمی محسوس ہوتی ہے؟ گیہوں کے دانوں کے ڈھیر کے اندر کچھ حرارت پیدا ہورہی ہے۔ بیجوں میں تنفس ہوتا ہے جس کے نتیجے میں کچھ حرارت ہوتی ہے۔ ہم دیکھتے ہیں کتنفس ایک ایسا عمل ہے جو کہ بیجوں میں اس وقت بھی ہوتا ہے جب کہ زندگی کے دیگر افعال ہوسکتا ہے بہت زیادہ سرگرم نہ ہوں۔ ہمارے سوال کا جواب اتنا آسان نہیں ہے۔ تو پھر زندگی کیا ہے؟ حالانکہ ہم اپنے اطراف میں جاندار چیزوں کی متنوع اقسام دیکھ کر پتہ نتیجہ نکال سکتے ہیں کہ زندگی خوبصورت ہے۔ کلیدی الفاظ توافق ای مسکن حیاتیاتی اجزا اخران تنفس خلاصه @ : وہ اطراف جہاں پودے اور جانور رہتے ہیں، ان کا سکن کہلاتا ہے۔ : ایک ہی مسکن میں مختلف قسم کے پودے اور جانور موجود ہو سکتے ہیں۔ مسکن اور اہم خصوصیات کی موجودگی، جو کسی پودے یا جانور کو کسی مخصوص مسکن میں رہنے کی صلاحیت عطا کرتی ہے تو انت کہلاتی ہے۔ جاندار عضویے اور ان کا اطراف 111 : مسکن کی مختلف اقسام ہیں، حالانکہ انہیں موٹے طور پر دو گروپوں میں تقسیم کیا گیا ہے۔ بری مسکن اور آبی مسکن۔ مختلف مساکن میں جاندار عضویوں کی مختلف تمیں پائی جاتی ہیں۔ پودے، جانور اور خود عضویے حیاتیاتی اجزاء کی تشکیل کرتے ہیں۔ چٹانیں مٹی، ہوا، پانی اور درجہ حرارت ہمارے ماحول کے غیر حیاتیاتی اجزاء ہیں۔ جاندار عضویوں میں کچھ مشترک خصوصیات موجود ہوتی ہیں مثلا انہیں غذا کی ضرورت ہوتی ہے، تنفس کرتے ہیں اور فضلات کا اخراج کرتے ہیں، اپنے ماحول کے تیں ردعمل کا اظہار کرتے ہیں۔ تولید کرتے ہیں، ان میں نمو ہوتی ہے اور حرکت کا اظہار بھی کرتے ہیں۔ مشقیں 1. مسکن کیا ہے؟ د۔ ریگستان میں زندہ رہنے کے لیے بلیٹس کا پودا کس طرح توافق کرلیتا ہے؟ 3۔ خالی جگہوں کو پرکھے (a) اہم خصوصیات کی موجودگی جو کسی جانور یا پودے کو کسی مخصوص مسکن میں رہنے کی صلاحیت کرتی ہے کہلاتی ہے۔ (b) زمین پر رہنے والے پودوں اور جانوروں کا مسکن مسکن کہلاتا ہے۔ (c) پانی میں رہنے والے پودوں اور جانوروں کا مسکن مسکن کہلاتا ہے۔ (a) مٹی، پانی اور ہوا سکن کے عوامل ہیں۔ (e ہمارے اطراف میں ہونے والی وہ تبدیلیاں جن کے تئیں ہم ردعمل کا اظہار کرتے ہیں کہلاتی ہیں۔ 4۔ مندرجہ ذیل فہرست میں کون کون سی چیز میں ہے جان ہیں؟ بل، مشروم، سلائی مشین، ریڈیو کشتی، واٹر استھ پچھوا ۔ کسی ایسی بے جان چیز کی مثال دیکھے جو جاندار عضویوں میں پائی جانے والی خصوصیات کو ظاہر کرتی ہو۔ 6۔ مندرجہ ذیل فہرست میں کون کون کیا ہے جان چیزیں، پہلے کسی جاندار چیز کا ایک حصہ تھیں۔ مصن، چڑا مٹی، اون، بجلی کا بلب، خوردنی تیل، نمک، سیب، ری۔ 7- جاندار عضویوں کی مشترک خصوصیات بیان کیے۔ 8- تشرت کیجیے کہ جو جانور گھاس کے میدانوں میں رہتے ہیں انہیں وہاں زندہ رہنے کے لیے رفتار بہت اہم ہے، کیوں؟ اشارہ: گھاس کے میدان والے مساکن میں جانوروں کو چھپنے کے لیے بہت جگہیں یا درخت موجود ہوتے ہیں)۔ ا 112 لاتنس مجوزہ پروجیکٹ اور عملی کام 1. کئی اخبارات اور میگزین میں اس بارے میں کافی کچھ کہا گیا ہے کہ زمین کے علاوہ بھی زندگی کے امکانات ہو سکتے ہیں۔ ان مضامین کو پڑھے اور کلاس میں بث ھے کہ زمین کے علاوہ کسی دوسرے سیارے پر زندگی کے امکان کو کس بنیاد پر پیش کیا گیا ہے۔ 2۔ مقائی چڑیا گھر کا دورہ کیجیے اور پتہ لگایئے کہ ان جانوروں کے لیے کیا خصوصی انتظامات کیے گئے ہیں جنہیں وہاں پر دوسرے مساکن سے لیا گیا ہے۔ 3۔ قطبی ریچھ اور ہیروئین کے مسکن کہاں کہاں ہیں؟ ہر ایک جانور میں اس کے مسکن کے لحاظ سے دو توافقی بناوٹیں بیان ۔ ایسے جانوروں کے بارے میں پینے لگا ہے جو ہمالیہ پہاڑ کے دامن میں رہتے ہیں۔ اس بات کا بھی پتہ لگایئے کہ جیسے جیسے ہمالیہ کے پہاڑی علاقوں میں اوپر کی طرف چلے جاتے ہیں تو کیا وہاں پر موجود پودوں اور جانوروں کی قسموں میں کچھ تبدیلیاں دیکھی جاسکتی ہیں۔ 5۔ مسکن پر ایک اسلیم تیار کیے۔ عملی کام میں آپ نے جن جانوروں اور پودوں کی فہرست تیار کی تھی ان کی تصاویر حاصل کیے اور اسلام میں مساکن کے مختلف سیکشنوں میں نہیں چسپاں کیے۔ ان مختلف علاقوں میں پائے جانے والے پودوں کی پتیوں کی شکل بنائے اور انہیں البم میں شامل کیے۔ اس کے علاوہ ان مختلف علاقوں میں پائے جانے والے پودوں کی شاخوں کے پیٹرن کی تصویر بنائے اور انھیں بھی اسلیم میں جگہ دیے۔ جس کا نام اور ے مسکن کیا؟ 7 الم جاندار عضویے اور ان کا اطراف 113

RELOAD if chapter isn't visible.